50

بھارتی معیشت کی رفتار صفر،3سال میں 4کروڑ لوگ بیروزگار ہوگئے ،پروفیسر ارون کمار

Spread the love

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک )چندما ہ قبل تک بھارت کی معیشت 8فیصد کی رفتار سے

ترقی کر رہی تھی جو کہ گرتے گرتے اب پانچ فیصد کی سطح تک جا پہنچی اور

ایسا اچانک نہیں ہوا،بھارتی معیشت پانچ فیصد کے بجائے صفر کی رفتار سے

ترقی کر رہی ہے ۔بھارتی ماہر معیشت پروفیسر ارون کمار نے برطانوی نشریاتی

ادارے کو بتایا کہ چاروں طرف سے معاشی سست رفتاری کی اطلاعات موصول

ہو رہی ہیں۔ لدھیانہ میں سائیکلوں اور آگرہ میں جوتے جیسی صنعتوں سے وابستہ

غیر منظم شعبے بڑی تعداد میں بند ہو چکے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ یہی حال

دوسرے شعبوں کا ہے ، مانگ میں کمی تو ڈی موناٹئیزیشن کے بعد سے ہی شروع

ہو گئی تھی، تین برسوں میں معیشت کو تین بڑے جھٹکے لگے ہیں جس کی وجہ

سے بے روزگاری میں اضافہ ہوا ہے ۔سی ایم آئی کے اعدادوشمار بتاتے ہیں کہ

ملک میں ملازمین کی تعداد 45کروڑ تھی جو کم ہو کر 41کروڑ رہ گئی ہے ،اس

کا مطلب یہ ہے کہ چار کروڑ لوگ بے روزگار ہو گئے ہیں، معاشی ترقی کی شرح

پانچ، چھ یا سات فیصد نہیں بلکہ یہ صفر فیصد ہے کیونکہ اس میں غیر منظم

شعبے کے اعداد و شمار شامل نہیں لیکن اگر حکومت کے پیش کردہ اعداد و شمار

کو غیر منظم شعبے کے اعدادوشمار میں شامل کیا جائے تو انڈین معیشت کساد

بازاری سے گزر رہی ہے ۔