185

صدراورمراد سعید کے ٹوئٹراکائونٹس بند کرنیکی بھارتی درخواستیں مسترد

Spread the love

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)سماجی رابطوں کی معروف عالمی سائٹ ٹوئٹر نے صدر

مملکت ڈاکٹر عارف علوی کے کشمیر سے متعلق بیانات کیخلاف درخواست مسترد

کر دی۔صدر عارف علوی مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت کے معاملے پر

سوشل میڈیا پر بہت زیادہ متحرک ہیں اور اس حوالے سے متعدد ٹوئٹس بھی کر

چکے ہیں، اس ضمن میں بھارت کی جانب سے صدر مملکت کے ٹوئٹر بیانات پر

انکا اکاؤنٹ بلاک کرنے کیلئے درخواست دی گئی جسے ٹوئٹر انتظامیہ نے مسترد

کر دیا اور صدر عارف علوی کے نام پیغام میں کہا تحقیقات میں ان کی کو خلاف

ورزی سامنے نہیں آئی۔قبل ازیں وفاقی وزیر انسانی حقوق شیریں مزاری نے ٹوئٹر

کی جانب سے بھیجی گئی ای میل کا سکرین شاٹ بھی اپنے سوشل میڈیا اکاؤ نٹ

کے ذریعے شیئر کرتے ہوئے سوشل میڈیا پلیٹ فام کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے

لکھا تھاٹوئٹر مودی سرکار کا آلہ کار بننے میں واقعی بہت آگے جا چکا ہے ، انہوں

نے ہمارے صدر کو بہت ہی برے اور مضحکہ خیز انداز میں نوٹس بھیجا۔دریں اثنا

کشمیر پر پاکستان کے بیانیہ سے پریشان بھارتی حکومت نے صحافیوں کے بعد

ٹویٹر انتظامیہ سے مراد سعید کا اکاؤنٹ بند کرنے کی درخواست بھی کی جسے

مسترد کر دیا گیا۔وفاقی وزیر مراد سعید نے مقبوضہ وادی کے بد ترین حالات پر

ٹویٹ کیا تھا کہ کشمیر میں بھارتی مظالم پر خاموش نہیں رہیں گے، ہم بھارتی

جارحیت کو دنیا بھر میں بے نقاب کریں گے۔بھارتی وزارت داخلہ سے شکایت

موصول ہونے پر ٹویٹر انتظامیہ نے مراد سعید سے رابطہ کیا اور انہیں آگاہ

کیا،بعدازاں اپنی پالیسی کے تحت تحقیقات کر کے تسلی ہونے پر بھارت کی جانب

سے مراد سعید کا ٹویٹر اکاونٹ بند کرنے کی درخواست بھی مسترد کر دی ۔