54

آ سٹریلیا کو شکست دے کر انگلینڈ نے فائنل میں جگہ پکی کر لی

Spread the love

برمنگھم(سپورٹس رپورٹر)،آسٹریلیا کو شکست دے کر انگلینڈ فائنل میں پہنچ گیا

انگلینڈ نے مطلوبہ ہدف 32 اوورز میں دو دکٹ کے نقصان پر پورا کر لیا۔ روٹ

اور مورگن ناقابل شکست رہے اور آوٹ نہی ہوئے۔ دونوں نے بالترتیب49 اور45

رنز بنائے ہدف کے تعاقب میں جونی بیرسٹو اور جیسن رائے نے جارحانہ بیٹنگ

کرتے ہوئے 124 رنزکی شراکت بنائی، دونوں بلے بازوں نے وکٹ کے چاروں

جانب شاندار اسٹروکس کھیلے جیسن رائے نے اسمتھ کو تین لگاتار چھکےلگا کر

اپنی نصف سنچری مکعمل کی۔ انگلینڈ کی پہلی وکٹ 124رنز پر گریجب بیئر سٹو

34 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے جب کہ جیسن رائے 85 رنز پر آؤٹ ہوئے۔ان کی اننگز

یہ بھی پڑھیں: ورلڈکپ سیمی فائنل ،نیوزی لینڈ نے بھارت کوورلڈ کپ سے آئوٹ کر دیا

میں 5 چھکے اور 9 چوکے شامل تھے۔اس سے قبل آسٹریلیا نے انگلینڈ کے خلاف

ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا ہے، آسٹریلیا کی جانب سے اننگز کا آغاز

ایرون فنچ اور ڈیویڈ وارنر نے کیا تاہم دونوں اوپنر صرف 10 کے مجموعی

اسکور پر پویلین لوٹ گئے، کچھ ہی دیر بعد پیٹر ہینڈز کومب بھی صرف 4 رنز

بناکر آؤٹ ہوگئے۔ٹاپ آرڈر کی ناکامی کے بعد اسٹیو اسمتھ اور الیکس کیرے نے

محتاط انداز میں بیٹنگ کرتے ہوئے ٹیم کا اسکور آگے بڑھایا اور 103 رنز کی

شراکت قائم کی جس کے بعد 46 رنز بناکر آؤٹ ہوگئے جب کہ کچھ ہی دیر بعد

اسٹوئنس بغیر کوئی رن بنائے پویلین لوٹ گئے۔ٹیم آسٹریلیا کومیکسوئل سے کافی

امیدیں وابستہ تھیں لیکن وہ بھی 22 رنز ہی بناسکے، پیٹ کمنز 6 اور مچل اسٹارک

29 رنز بنانے کے بعد آؤٹ ہوئے جب کہ اسٹیو اسمتھ نے ذمہ داری کا مظاہرہ

کرتے ہوئے اسکور کو آگے بڑھایا تاہم وہ آخری لمحات میں 85 رنز بنانے کے بعد

رن آؤٹ ہوگئے۔انگلینڈ کی جانب سے کرس ووکس اور عادل رشید نے 3،3 جب کہ

جوفرا آرچر نے 2 وکٹیں حاصل کیں۔کرکٹ ورلڈکپ کے لیگ میچز میں آسٹریلیا

نے 9 میں سے 7 میچز کھیلے اور 2 میں شکست کا سامنا کرنا پڑا جب کہ انگلینڈ

کی ٹیم 6 میچز میں فاتح رہی اور 3 میں شکست کا سامنا کرنا پڑا، پوائنٹس ٹیبل پر

آسٹریلیا کی ٹیم 14 پوائنٹس کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہے جب کہ انگلینڈ کی ٹیم

12 پوائنٹس کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہے۔