73

عدالتی نظام اجازت دے تو پریس کانفرنس کر سکتا ہوں، جج ارشد ملک

Spread the love

اسلام آباد(کورٹ رپورٹر)اسلام آباد کی احتساب عدالت کے جج ارشد ملک نے کہا

ہے میرے خلاف جھو ٹا پروپیگنڈا کیا جا رہا ہے،پریس کانفرنس سے متعلق

رجسٹرار کی رائے لے چکا ہوں ، عدالتی نظام اجازت دے تو پریس کانفرنس بھی

کر سکتا ہو ں ، میرے بیا نا ت کو توڑ مروڑ کر پیش کرنے کی کوشش کی گئی ،

میں کسی کی بلیک میلنگ میں نہیں آتا ۔پیر کو نجی ٹی وی سے گفتگومیں ارشد

ملک نے کہامیں منظر عام پر لائی گئی ویڈیوکے ایک ایک حرف کا جواب دے

سکتا ہوںجبکہ ناصر بٹ کیساتھ ملاقات کی ویڈیو نواز شریف کے مقد مے سے

پانچ دن قید کی سزا، رہائی 6 سال بعد، جج کی ملزم سے معذرت

پہلے کی ہے ، میں خود کو احتساب کیلئے پیش کرتا ہوں، میرے ضمیر پر کوئی

بوجھ نہیں ۔ادھر مسلم لیگ ن کی جانب سے احتساب عدا لت کے جج ارشد ملک کی

مبینہ ویڈیو سامنے آنے پر ارشد ملک کے چیمبر کی سکیورٹی بڑھا دی گئی ہے،

احتساب عدالت کے جج ارشد ملک اس ویڈیو کو جعلی اور مفروضے کی بنیاد پر

بنائی گئی ویڈیو قرار دیتے ہوئے اس ویڈیو سے لاتعلقی کا اظہار کر چکے ہیں ۔

ایک اطلاع یہ بھی ہے مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے ویڈیو میں موجود

ناصر بٹ سے رابطہ کر کے انہیں پریس کانفرنس کی تیاری کرنے کی ہدایت کر

یہ بھی پڑھیں:پاکستان میں پہلی بار ہندو خاتون سمن پاون بدانی سول جج کے عہدے پر فائز

دی ہے۔ پارٹی ذرائع کے مطابق مسلم لیگ (ن) کے رہنما ناصر بٹ اسوقت لندن

میں قیام پذیر ہیں ، ناصر بٹ کسی سے براہ راست رابطہ کررہے ہیں اور نہ ہی ان

کیساتھ خاص افراد کے علاوہ کسی اور کی ملاقات ہورہی ہے جبکہ انہیں پارٹی

قیادت کے پیغامات پہنچانے کیلئے بھی تھرڈ چینل کااستعمال کیا جارہا ہے اور ان

کے قریبی رفقا کے ذریعے پیغام پہنچایا جارہا ہے۔