170

دنگل گرل زہراہ وسیم کی بالی ووڈ چھوڑنے کی اندرونی کہانی

Spread the love

ممبئی،لاہور(جے ٹی این آن لائن خصوصی رپورٹ)

بالی ووڈ فلم دنگل سے شہرت حاصل کرنے والی نامور اداکارہ زائرہ وسیم کی

بالی ووڈ اندسٹری کو چھوڑنے کی اندرونی کہانی منظر عام پر آ گئی، جوانسال

نامور ادکارہ کہتی ہیں انہوں نے یہ فیصلہ اپنے مذہب اور ایمان کے تحفظ کی

خاطر کیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق انڈیا کے زیر تسلط کشمیر کے دارالحکومت سری نگر

سے تعلق رکھنے والی بالی ووڈ کی مشہور اداکارہ زائرہ وسیم نے فلمی دنیا کو

خیر باد کہہ دیا ہے۔ زائرہ وسیم نے 2015 میں اداکار عامر خان کی بلاک بسٹر فلم

دنگل سے اپنے فلمی کیریئر کا آغاز کیا تھا۔اس حوالے سے اداکارہ کا کہنا ہے کہ

عامر خان کی فلم دنگل کا وہ معروف سین جب زاہرہ وسیم اور انکی بہن کو انکا

والد پہلے روز صبح سویرے ورزش کیلئے لے جاتے ہوئے گول گپوں کی ریڑھی

پر لے جاتا ہے اور کہتا ہے آج جتنے کھانے ہیں کھا لو آئندہ انہیں صرف دیکھ تو

سکوگی کھا نہیں سکو گی جس پر دونوں بہنیں سکتے میں آ جاتی ہیں اور اپنے

چہروں پر ایسے تاثرات دیتی ہیں کہ فلم بین بھی خود کو اسی کیفیت میں محسوس

کرنے پر مجبور ہو جاتے ہیں
————————————————————–

یہ بھی جانیئے:…. اداکارہ صوبیہ خان نے شوبز خیرباد کہہ دیا

وہ اپنی زندگی میں ایمان اور برکت کھو رہی تھیں، ان کا اپنے مذہب کے ساتھ

رشتہ خطرے میں پڑ گیا تھا جس کے باعث انہوں نے فلموں میں کام نہ کرنے کا

فیصلہ کیا۔سوشل میڈیا سائٹ فیس بک پر زائرہ وسیم نے ایک طویل پوسٹ شیئر کیا

ہے جس میں انہوں نے قرآن کی متعدد آیات، حضرت محمد صلی اللہ علیہ و آلہ

وسلم اور خلیفہ دوم حضرت عمر کے اقوال کا حوالہ دیتے ہوئے اپنے فیصلے کی

وضاحت کی ہے۔زائرہ وسیم نے اپنے پوسٹ میں لکھا کہ پانچ سال پہلے میں نے

ایک فیصلہ کیا تھا جس نے میری زندگی ہمیشہ کے لئے بدل دی۔ جیسے ہی میں

نے بالی ووڈ میں قدم رکھا تو میرے لئے بے تحاشہ مقبولیت کے دروازے کھل

گئے۔ میں لوگوں کی توجہات کا مرکز بننے لگی۔ مجھے نوجوانوں کے لئے رول

ماڈل قرار دیا گیا۔آج جب میں نے پانچ سال مکمل کئے تو میں اس بات کا اعتراف

یہ بھی پڑھیں:…. اب خواہش و دعا ہے خدا آخرت اچھی کرے، بشریٰ انصاری

کرنا چاہوں گی کہ میں اپنے کام سے خوش نہیں ہوں۔ بے شک یہ فیلڈ میرے لئے

بے پناہ پیار، حمایت اور ستائش کا موجب بنی لیکن یہ فیلڈ مجھے جہالت کی طرف

لے جارہا تھا اور میں آہستہ آہستہ اپنا ایمان کھو رہی تھی۔فلم دنگل کی اداکارہ نے

کہا کہ چونکہ میں ایک ایسے ماحول میں کام کررہی تھی جہاں میرے ایمان کے

ساتھ مسلسل دخل اندازی ہورہی تھی میرا میرے مذہب کے ساتھ رشتہ خطرے میں

پڑ گیا تھا۔زائرہ وسیم نے مزید لکھا کہ میں اپنے آپ کو تسلی دے رہی تھی کہ میں

جو کچھ کررہی ہوں وہ ٹھیک ہے اور اس راہ کا میری ذاتی زندگی پر کوئی بڑا اثر

نہیں پڑرہا تھا۔ لیکن میں اپنی زندگی میں برکت کھونے لگی۔انہوں نے فلمی کیریئر

کو خیر باد کر نیکا اعلان کرتے ہوئے لکھا ہے کہ بالی وڈ میں میرا سفر تھکاوٹ

سے بھرا پڑا رہا۔ میں اپنی روح سے لڑ رہی تھی۔ لہذا آج میں اپنی فیلڈ سے کنارہ

کشی اختیار کرنے کا اعلان کرتی ہوں۔

واضح رہے کہ اداکاہ زائرہ وسیم نے اپنے مختصر فلمی کیریئر کے دوران تین

بالی ووڈ فلموں جن میں دنگل، سیکرٹ سپر اسٹار اور دی اسکائی از پنک جو ابھی

ریلیز ہونا باقی ہے میں اداکاری کرچکی ہیں۔