206

“جو” کی قسمت کا حال، 909 کی نصیحت

Spread the love

قارئین کرام! ایجنٹ 909 کی آٹھویں قسط کی تاخیر سے اشاعت پر انتہائی معذرت

خواہ، نیز سچی کہانیوں کے سلسلے کی بے حد پذیرائی پر ہم آپ کے مشکور ہیں،

لیجیئے سلسلہ وہیں سے شروع کرتے ہیں جہاں سے ٹوٹا تھا،

ڈانس کے دوران “جو” اچانک بولی اسے کچھ کہنا ہے، 909 جانتا تھا وہ نروس

تھی اور اپنی نجی زندگی کے حوالے سے اس سے کچھ باتیں شیئر کرنا چاہتی

تھی، وہ اپنی ذات کیلئے مستقبل سے متعلق اہم فیصلے کرنا چاہتی تھی، 909

اسے بولنے کا موقع دینا چاہتا تھا، اس نے “جو” سے کہا یہاں سے چلنا چاہئے،

بہت شور ہے، وہ بھی شاید یہی چاہتی تھی، دونوں نے فوراً باہر کی راہ لی اور

شور شرابے کی دنیا سے باہر کھلے آسمان تلے آ گئے، 909 نے پارکنگ میں

کھڑی اپنی گاڑی کو دور ہی سے ان لاک کیا۔ دونوں گاڑی میں بیٹھے، 909 نے

گاڑی سٹارٹ کی اور ایک فائیو سٹار ہوٹل کی جانب چل پڑا۔ 15 منٹ کی مسافت

کے بعد ہوٹل پہنچ چکے تھے، جو ہوٹل دیکھ کر بولی ’’اوہ شاندار‘‘ ہوٹل لابی

میں رش نہ ہونے کے برابر تھا، دونوں ایک صوفے پر جا کر بیٹھ گئے، ایک

چوکس ویٹرس نرم و ملائم چال کیساتھ ان کے پاس آئی، 909 نے ریڈ وائن، ڈک

اینڈ رائس کا آرڈر کیا۔ “جو” بالکل خاموش بیٹھی رہی، اسے اس آرڈر سے کوئی

دلچسپی نہ تھی، اس کی طبعیت میں بے چینی نمایاں تھی، ویٹرس کے جانے کے

بعد 909 نے “جو” سے کہا وہ کھل کر اپنے جذبات کا اظہار کرے، 909 نے اس

پر یہ بھی واضح کر دیا یہ ملاقات صرف باتوں کی حد تک رہے گی، جسمانی

تعلقات کی نوبت نہیں آئیگی، “جو” اس بات پر چونکی اور اس کے کچھ خدشات

“جو” 909 ، باغ کی صفائی، نائٹ کلب اور ڈانس

بھی دور ہو گئے، وہ فوراً بولی کہ وہ اپنی زندگی سے اکتا چکی ہے، اسے اپنی

مرضی کے مطابق جینا ہے، جب سے اس کا بوائے فرینڈ اس کی زندگی میں آیا

ہے وہ دوسروں سے کٹ کر رہ گئی ہے، اس کی والدہ اور دو بہنیں لیور پول میں

رہتے ہیں لیکن اس دوران وہ انہیں ملنے نہیں جا سکی، دن کا زیادہ وقت بوائے

فرینڈ کی والدہ کی دیکھ بھال اور گھر کے کام کاج میں گزر جاتا ہے، اسکا بوائے

فرینڈ اس کے عزیز و اقارب اور دوستوں میں ایک طاقتور اور بارعب سمبل کے

علاوہ کچھ نہیں، “جو” نے کہا اسے “سٹیٹس کو” نہیں چاہئے بلکہ وہ اپنی مرضی

سے اپنی زندگی جینا چاہتی ہے، یہ بالکل ایسے ہی ہے جیسے ہر برٹش لڑکی

چاہتی ہے، کوئی بھی لڑکی یہ پسند نہیں کرتی اسے غلام بنا کر رکھا جائے، اگر

وہ کسی بات پر شکا یت کرتی ہے تو اس کے بوائے فرینڈ کو ناگوار گزرتا ہے،

حقیقی خوشی

وہ اپنی افسری کے رعب میں اسے اچھے مستقبل کے خواب دکھاتا ہے، آخر کب

تک؟ “جو” کی آنکھوں میں موٹے موٹے آنسو تھے، اس نے خود پر ضبط رکھتے

ہوئے بات آگے بڑھائی اور کہا، ابتک وہ کسی دور دراز تفریحی مقام پر بھی نہیں

جا سکی، آج رات گئے واپس آنے پر بھی اسکے بوائے فرینڈ کی والدہ نے

ناگواری کا اظہار کیا اور یقیناً وہ اپنے بیٹے کے گوش گزار ضرور کرے گی،

“جو” نے فیصلہ کن انداز میں کہا کہ اسے اپنے بوائے فرینڈ کو ہر صورت میں

الوداع کہنا ہو گا، وہ اب مزید برداشت نہیں کر سکتی، یہ کہہ کر خاموش ہو گئی۔

909 نے بظاہر انتہائی معصومیت کیساتھ اسکے تاثرات کو سنا اندر ہی اندر وہ

بیزار تھا کیونکہ اس عمر کی ہر دوسری برطانوی لڑکی کی بپتا تھی اور وہ اس

صورتحال سے بخوبی واقف تھا، اس نے فوراً “جو” کو نارمل ہونے کا کہا اور

بتایا اسکی پیشانی بتاتی ہے وہ مستقبل میں اپنے نام سے جلد شہرت کی بلندیوں

پر پہنچنے والی ہے، پھر 909 نے جو سے اس کے مشغولات کے بارے میں

پوچھا، پہلے تو “جو” اپنی تعریف سن کر یکدم اپنے تمام غم بھول گئی اور بتانے

لگی اسے گانے کا شوق ہے وہ سکول میں اچھا گاتی تھی، اسکے علاوہ اسے نیل

ڈیزا ئننگ پر بھی عبور حاصل ہے، 909 جانتا تھا اسے خاص کچھ بھی نہیں آتا،

اس نے “جو” کو ہاتھ دکھانے کیلئے کہا، وہ اسکے قریب ہو گئی اور اپنا ہاتھ میز

پر رکھ دیا، 909 نے ایک سادہ کاغذ اور پین جیب سے نکالا اور اس کا ہاتھ دیکھ

کر انگریزی میں الٹا سیدھا لکھتا گیا، وہ قریباََ 3 منٹ تک اس کے ہاتھ کا جائزہ لیتا

رہا اور لکھتا رہا، پھر “جو” سے کہا اپنے دانت دکھائے، “جو” نے مسکراتے

ہوئے دانت دکھائے، 909 نے جو سے کہا کہ وہ عام لڑکی نہیں،منفی طاقتیں اسے

کچھ کرنے پر روک رہی ہیں اور اس کا وقت ضائع کر رہی ہیں،”جو” نے پوچھا،

کیسی منفی طاقتیں؟ 909 نے کہا حسد سے منسلک فریکونسی طاقتیں ہیں جو اس

کے دوستوں سے جڑی ہیں، تمھارے دوست تم سے حسد کرتے، بہت ہی قریبی

افراد تمھیں روتا دیکھنا چاہتے ہیں، وہ چاہتے ہیں تم اور تمھارا بوائے فرینڈ الگ

الگ ہو جائیں، تم شرابی بن جائو اور معاشرے سے کٹ کر رہ جائو، وہ طاقتیں

تمھیں اس عمل پر اکسا رہی ہیں، “جو” فوراً بولی، بالکل ٹھیک کہہ رہے ہو تم،

میں ہر وقت خود سے بدلہ لینے کا سوچتی رہتی ہوں، مجھے اپنا آپ برا لگتا ہے،

میں اچھا دکھائی نہیں دینا چاہتی، تم نے ٹھیک کہا، اوہ مائی گاڈ، تم نے میرے اندر

کو پڑھ لیا ہے، تم یہ سب کیسے کر سکتے ہو؟ تم جھوٹے نہیں ہو سکتے، یہ سب

سچ ہے، اسی دوران مرد ویٹر میز کے قریب ٹرالی لا کر رک گیا، وہی آرڈر

لینے والی خاتون اسکے پیچھے تھی، اس نے ایک دلکش مسکراہٹ کیساتھ کھانا

میز پر رکھنا شروع کر دیا اور پھر نیک خواہشات کا اظہار کرکے وہاں سے چلی

گئی، 909 نے “جو” سے کہا وہ اسے آج رات اس الجھن سے ہمیشہ ہمیشہ کیلئے

نکال دیگا، دونوں نے مسکراتے ہوئے کھانا شروع کر دیا، “جو” بولی اسے ڈک

اور رائس بہت پسند ہیں اور ریڈ وائن کو پئے ایک لمبا عرصہ گزر چکا، جسے

وہ آج پھر انجوائے کر رہی ہے، دونوں کھانا کھاتے رہے اور آپسمیں ہلکی پھلکی

باتیں بھی کرتے رہے، کھانا ختم کرنے پر 909 نے اشارہ کیا تو ویٹر فوراً چلا آیا

اور برتن اٹھا کر چلتا بنا، البتہ ریڈ وائن میز پر ہی موجود رہی، 909 نے “جو”

سے دو پیگ بنانے کا کہا، “جو” نے اپنے سفید گلابی ہاتھوں سے انتہائی نفاست

کیساتھ دو گلاسوں میں ریڈ وائن انڈیلی اور پھر دونوں نے جام سے جام ٹکرائے

اور پینا شروع کر دیا۔ 909 نے “جو” سے کہا کہ کیا وہ ایسا کرے گی جیسا وہ

کہے گا؟ اس نے فوراً کہا کیوں نہیں، بتائیں کرنا کیا ہے؟، 909 نے اسے کہا کہ

ایک ماہ کے اندر اندر اپنے بوائے فرینڈ کو چھوڑنے کا پختہ ارادہ کرلے اور

واپس لیور پول لوٹ جائے لیکن اس دوران وہ اپنے مستقبل کے کاروبار کیلئے

اپنے بوائے فرینڈ سے اچھی خاصی رقم کا مطالبہ کرے جس سے وہ آسانی سے

اپنا کاروبار شروع کر سکے، اس بات کی خبر اپنے بوائے فرینڈ کی والدہ کو نہ

ہونے دے کیونکہ اس کا بوائے فرینڈ لاکھوں میں کما رہا ہے، وہ اسے با آسانی

پیسہ دیدے گا، اس نے “جو” کا ہاتھ پکڑتے ہوئے انتہائی ہمدردانہ لہجے میں اسے

کہا کہ یہ پیسہ اس کا حق بنتا ہے جو وقت اس نے اپنے بوائے فرینڈ کی والدہ پر

صرف کیا، اس نے “جو” سے صاف کہا کہ آئندہ 3 سال تک اسکے بوائے فرینڈ

کو چھٹی نہیں ملے گی اس کے بعد اسے جبری ریٹائر کر دیا جائے گا، پھر کونسا

سٹیٹس؟ جمع پونجی کو اس کا بوائے رینڈ اپنی ذات پرلگائے گا اور اس کی ویلیو

صفر ہوجائے گی، یہی اس کا مقدر ہے اگر یقین نہیں کرنا تو وہ ایسا کرکے دیکھ

لے، اسے یہ ملاقات اور باتیں یاد آئیں گی،”جو” نے خود کو کپکپی کے انداز میں

ہلایا اور کہا کہ تم ٹھیک کہہ رہا ہو مجھے میرا حق ملنا چاہئے، 909 نے اسے

طریقہ بتایا کہ کیسے وہ کاروبار کا کہہ کر اپنے بوائے فرینڈ سے پیسے لے

سکتی ہے، اس دوران اسے اپنے بوائے فرینڈ کی والدہ کو خوش رکھنا ہو گا کہ

وہ بھی اپنے بیٹے سے تمھاری خواہش پوری کرنے کی سفارش کرے، اس نے

“جو” سے کہا کہ وہ فیشن ڈیزائننگ میں لیور پول میں تہلکہ مچا سکتی ہے،اسکی

سہیلیاں اور عزیز و اقارب ہی اسکے زیادہ تر گاہک ہوں گے، یوں اس کا کاروبار

چمک اٹھے گا۔ وہ سارا پیسہ لے کر چلتی بنے اور اپنے بوائے فرینڈ سے ہمیشہ

کیلئے لاتعلقی کا اظہار کر دے، “جو” ساری بات سمجھ چکی تھی، وہ اس تبدیلی

اور فیصلے پر انتہائی خوش دکھائی دے رہی تھی، بالآخر دونوں وہاں سے اٹھے،

909 نے بل ادا کیا اور وہ باہر آ گئے، دونوں گاڑی میں بیٹھے اور چل دیئے،

پنتالیس منٹ بعد “جو” کا گھر آ گیا، 909 نے گاڑی کا انجن بند کر دیا، باہر چاروں

جانب گہرا اندھیرا تھا،”جو” نشے میں تھی اور بہت خوش تھی، 909 نے “جو”

سے کہا یہ شاید آخری ملاقات ہے،”جو” تڑپ کر اسکی گود پر آبیٹھی اور اسکے

لبوں کو اپنے لبوں میں سمو لیا، وہ ایسا کرتی جا رہی تھی، پھر تھوڑی دیر بعد

وہ پیچھے ہٹی تو 909 نے اس کی پشت پر ہایھ پھیرتے ہوئے اپنے سینے سے لگا

لیا اور نصیحت کی کہ بالکل ویسا کرے جیسا کہا گہا تھا ورنہ کچھ ہاتھ نہیں آئیگا

اور مستقبل کیلئے بوائے فرینڈ کے انتخاب میں جلدی نہ کرے، کم ازکم 3 سال بعد

کسی لڑکے کو اپنے دل میں جگہ دے، اس سے پہلے 909 اسے مزید کچھ اور

نصیحت کرتا اچانک “جو” نے909 کو بیڈ روم میں آنے کا کہا، وہ بہت گرم تھی

اور بہت کچھ چاہتی تھی، مگر 909 نے بیڈ روم میں آنے سے انکار کرتے ہوئے

کہا کہ یہ ہوس اس کی شخصیت کو نقصان پہنچائے گی، پھر کبھی موقع ملا تو

رابطہ کرکے کسی ساحل پر انجوائے کرنے چلیں گے، “جو” نے دوبارہ ایک

طویل کس کی اور پھر دورازہ کھول کر اپنے گھر کو چل پڑی، 909 اسے جاتے

ہوئے دیکھتا رہا اور پھر گاڑی سٹارٹ کرکے وہاں سے چل پڑا-

۔۔۔۔ جاری ۔۔۔۔