70

فارن کوالیفائیڈ چور

Spread the love

نئی دہلی(جے ٹی این آن لائن ) بھارتی پولیس نے بالآخر ریلوے کی اے سی کوچز

میں خواتین کو اپنی قابلیت سے الو بنا کر ان کے طلائی زیورات اور قیمتی سامان

چرانے والے شخص کو چار سال کی تگ و دو کے بعد پکڑ لیا،ملزم اعلیٰ درجے

کا چور بتایا جاتا ہے اور اب تک چوری کی 30 وارداتوں میں ایک کلو کے قریب

سونا اور قیمتی سامان لوٹ چکا ہے،ملزم نے ہالینڈ سے تعلیم حاصل کی ، اٹلی اور

فرانس سمیت اسے 6 بین الاقوامی زبانوں پر عبور حاصل ہے۔ بھارتی پولیس کے

مطابق 39 سالہ شاہول حمید ایک پڑھا لکھا چور ہے، وہ تامل ناڈو اور کیرالہ کے

درمیان اے سی کوچز میں سفر کے دوران خواتین سے علیک سلیک بڑھاتا تھا اور

رات کو تین سے چار بجے کے دوران مسافروں کے بیگ کھول کر ان میں قیمتی

سامان چوری کر کے بیگز کو ان کی جگہ پر واپس رکھ دیتا تھا،ملزم کے ساتھ اس

کی دوسری بیوی جس کا نام شاہانہ ہے ملوث پائی گئی، ملزم چوری شدہ سامان

ممبئی میں جا کر بیچتا تھا اور کوالالمپور جا کر اپنا ہوٹل کا کام سنبھال لیتا تھا،

چوری کی وارداتوں کے بعد پولیس نے ریکارڈ چیک کیا تو معلوم ہوا جن کوچز

میں چوری ہوئی وہاں شاہول نامی مسافر کی بکنگ بھی تھی ،شک پڑنے پر پولیس

نے ملزم کو گرفتار کرنے کی کوشش کی تو اس نے سخت مزاحمت کی اور خود

کو ایک بزنس مین بتایا تاہم تفتیش کرنے پر اس نے چوری کا اعتراف کر لیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply